فلسٹار شاہد کی ڈاکٹر زی حسن شو فرام امریکا میں شرکت

0

پاکستان کے نامور اداکار شاہد نے معروف ڈائریکٹر اور پروڈیوسر ڈاکٹر حسن زی کے شو ‘ڈاکٹر زی شو فرام امریکا’ میں شرکت کی۔ اس گفتگو کے دوران انہوں نے پاکستان فلم انڈسٹری کے سنہری دور کو یاد کیا اور اس دور سے جڑی اپنی یادوں کو ناظرین کے ساتھ شئیر کیا۔
پاکستانی نژاد امریکن فلم ڈائریکٹر ڈاکٹر حسن زی نے اپنے آن لائن شو کا آغاز کیا ہے جس میں وہ پاکستان کے نامور فلمی اداکاروں کا انٹرویو کرتے ہیں۔وہ اس شو کے ذریعے پاکستان فلم انڈسٹری کو دنیا بھر میں متعارف کرانا چاہتے ہیں اور یہ باور کرانا چاہتے ہیں کہ پاکستانی اداکار کسی سے کم نہیں۔ڈاکٹر حسن زی کا کہنا تھا کہ ستر اور اسی کی دہائی میں بننے والی پاکستانی فلمیں معیار کے لحاظ سے دنیا بھر کی فلم انڈسٹریز کا مقابلہ کرسکتی ہیں۔اسی لیے وہ اس شو کے ذریعے دنیا بھر اور بالخصوص پاکستانیوں کو اس دور کی سنہری یادوں سے متعارف کرا رہے ہیں۔
فلم اسٹار شاہد نے شو کے دوران اپنی زندگی کی کہانی اور فلمی سفر کو بیان کیا۔ شاہد کا کہنا تھا کہ وہ فوج میں جانا چاہتے تھے لیکن ایک دوست ان کو فلم اسٹوڈیو لے گئے اور یوں وہ ہیرو بن گئے۔شاہد نے فلمی کیریئر کے دوران شبنم’ دیبا’ نشو’ممتاز’ آسیہ’ رانی اور بہت سی ہیروئینز کے ساتھ کام کیا۔ دلچسپ بات یہ ہے کہ شاہد کا کہنا تھا کہ کامیڈی اداکاروں کے ساتھ کام کرتے ہوئے شروع میں انہیں کافی دقت ہوئی کیونکہ ان آرٹسٹوں کی پرفارمنس سے شاہد کے لیے ہنسی روکنا بہت مشکل ہو جاتا تھا۔ انھوں نے یہ بھی بتایا کہ رنگیلا’ منور ظریف’ ننھا’طالش اور علاءالدین سینیر اداکار تھے اور ان سب کی حوصلہ افزائی نے ان کے کیریئر کے آغاز میں بہت زیادہ مدد کی۔خواتین اداکاروں میں نشو اور دیبا نے بھی ان کی کافی رہنمائی کی۔ اس گفتگو میں شاہد نے اپنی فلم امراؤ جان ادا اور اس فلم میں ماضی کی نامور اداکارہ رانی کی پرفارمنس کا بطور خاص ذکر کیا۔
فلم اسٹار شاہد کا کہنا تھا کہ ہم دنیا کے کسی کونے میں بستے ہوں ہم سب پاکستانی ہیں اور ہم جو کچھ بھی ہیں پاکستان کی وجہ سے ہیں۔شاہد نے یہ بھی کہا کہ وزیراعظم عمران خان کو پاکستان فلم انڈسٹری پر بھی توجہ کرنا چاہیے۔
‘ڈاکٹر زی شو فرام امریکا’ یو ٹیوب پر دیکھا جا سکتا ہے۔ شاہد کے ساتھ ہونے والے پہلے انٹرویو کو دنیا بھر میں پسندیدگی کی نگاہ سے دیکھا جا رہا ہے۔

جواب دیجئے

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.

%d bloggers like this: