صدارتی امیدوار کے بیٹے پر قاتلانہ حملے کا انتباہ جاری

صدارتی امیدوار کے بیٹے پر قاتلانہ حملے کا انتباہ جاری

ڈیرہ اسماعیل خان کے ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر ( ڈی پی او) نے متحدہ مجلس عمل کے صدر مولانا فضل الرحمٰن کے بیٹے اور رکن قومی اسمبلی مولانا اسد محمود پر قاتلانہ حملے کا خدشہ ظاہر کردیا۔
واضح رہے کہ مولانا اسد محمود نے صوبائی اسمبلی کی نشست 37 (ٹانگ) سے ایم ایم اے کے امیدوار کی حیثیت سے کامیابی حاصل کی تھی۔

25 جولائی کے انتخابات سے قبل انتخابی مہم کے دوران مولانا اسد محمود پر قاتلانہ حملہ ہوا تھا۔
ڈی آئی جی کی جانب سے جاری مراسلے میں واضح کہا گیا کہ ’مولانا اسد محمود پر تحریک طالبان نور ولی گروپ کی جانب سے قاتلانہ حملے کا خدشہ ہے‘۔
مولانا اسد محمود اور متعلقہ افسران کو مراسلے میں احتیاطی تدابیر اپنانے کی ہدایت کی گئی ہے۔
مراسلے میں کہا گیا کہ ’کسی بھی ناگہانی صورت حال سے بچنے کے لیے غیر ضروری آمد و رفت ختم اور سیاسی دوروں کو محدود کردیا جائے‘۔
مراسلے میں ہدایت کی گئی کہ ’مولانا اسد محمود کی سیاسی اور نجی تقریبات کو خفیہ رکھا جائے‘۔

You might also like

Comments are closed.