گستاخانہ خاکوں کیخلاف آواز اٹھانے پر رابی پیرزادہ کا ٹوئٹر اکاؤنٹ بند

گستاخانہ خاکوں کیخلاف آواز اٹھانے پر رابی پیرزادہ کا ٹوئٹر اکاؤنٹ بند

ٹوئٹس عشق رسول میں کی تھیں‘ اکاؤنٹ معطل ہونے پر کوئی افسوس نہیں‘گلوکارہ
گستاخانہ خاکوں کیخلاف آواز اٹھانے پر ٹوئٹر انتظامیہ نے پاکستان کی مقبول ترین گلوکارہ رابی پیرزادہ کا ٹوئٹر اکاؤنٹ معطل کردیا۔ ہالینڈ کے رکن پارلیمنٹ گیرٹ ولڈرز کی جانب سے گستاخانہ خاکوں کے مقابلوں کے انعقاد پر جہاں پاکستان سمیت دنیا بھر کے مسلمانوں نے احتجاج کیا وہیں شوبز انڈسٹری سے تعلق رکھنے والی نامور پاکستانی گلوکارہ رابی پیرزادہ بھی چپ نہ رہیں اور ناموس رسالت کے مرتکب گیرٹ ورلڈرز کو ٹوئٹر پر پھانسی دینے کامطالبہ کیا۔گلوکارہ رابی پیرزادہ کی ٹوئٹ پر گیرٹ ورلڈرز کے حامیوں کی جانب سے سخت واویلا کیا گیا اور انہیں تشدد پھیلانے کا مرتکب قراردیتے ہوئے ان کا ٹوئٹر اکاؤنٹ بند کرنے کا مطالبہ کیا گیا۔ رابی پیرزادہ کے خلاف جاری مہم کے بعد ٹوئٹر انتظامیہ نے ان کا اکاؤنٹ عارضی طور پر معطل کردیا۔رابی پیرزادہ نے اپنے ٹوئٹر اکاؤنٹ پر پابندی لگنے کی اطلاع اپنے دیگر سوشل میڈیا اکاؤنٹس پر دیتے ہوئے کہا میں نے یہ ٹوئٹس عشق رسول میں کی تھیں جس کی مجھے یہ سزا ملی لیکن مجھے اکاؤنٹ معطل ہونے پر کوئی افسوس نہیں بلکہ خود پر فخر ہے کہ میں نے ناموس رسالت پر آواز اٹھائی۔

You might also like

Comments are closed.