علی ظفر کا پاک چین مشترکہ فلم سازی کی ضرورت پر

علی ظفر کا پاک چین مشترکہ فلم سازی کی ضرورت پر

نامور گلوگار و اداکارعلی ظفر نے پاکستان اور چین کے درمیان مشترکہ فلم سازی کی ضرورت پر زور دیتے ہوئے کہا ہے کہ دونوں ممالک کو اس سلسلے میں ایک دوسرے کے تجربات سے فائدہ اٹھانا چاہیے۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے سلک روڈ انٹرنیشنل فلم فیسٹیول STIFF میں اپنی فلم طیفا ان ٹربل کی نمائش کے بعد بین الاقوامی فلمی وفود سے ملاقات میں کیا۔علی ظفر نے بھارت۔ترکی۔کینیڈا۔جنوبی افریقہ۔مصر۔کروشیا۔سربیا۔ملائشیااور جارجیا کے وفود سے ملاقات کی۔ان کا کہنا تھا کہ پاکستان فلم انڈسٹری میں بے ہنسی توانائی ہے جس کا دوسرے ممالک سے اشتراک ضروری ہے علی ظفر نے مزید کہا کہ ان کی فلم101سکرین پر ریلیز کی گئی تھی جس نے2.7 ملین ڈالر کا بزنس کیا ہے۔آبادی کے تناسب سے پاکستان میں1000سے1500سکرینوں کی گنجائش ہے۔انہوں نے کہا کہ پاکستان میں چینی فلموں کی نمائش بہت ضروری ہے۔سال میں کم از کم تین فلموں کی نمائش ہونی چاہیے جس کے ساتھ دونوں ممالک کے فلم سٹوڈنٹس کو ایک ساتھ کام کے مواقع ملنے چاہئیں۔

قبل ازیں علی ظفر نے چائنا فلم کو پروڈکشن کے صدرماوزے ژیان اور چائنا فلم گروپ کے وائس پریذیڈنٹ جیانگ ینگ سے ملاقات میں دونوں ممالک کے درمیان فلمی سرمایہ کاری کی ضرورت پر زوردیا۔فیسٹیول میں ان کی فلم طیفا ان ٹربل کی بہت پزیرائی کی گئی اور تمام شرکاء نے اسے بہت پسند کیا۔

You might also like

Leave A Reply

Your email address will not be published.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.