مشہور زمانہ ڈکیت غلام رسول عرف چھوٹو کے کیس کا فیصلہ ہوگیا

مشہور زمانہ ڈکیت غلام رسول عرف چھوٹو کے کیس کا فیصلہ ہوگیا

چھوٹو گینگ کے سربراہ غلام رسول عرف چھوٹو کو 18 بار سزائے موت کی سزا سنا دی گئی۔

چھوٹو گینگ کے 18سال سے بڑی عمر کے دیگر 17 ڈاکوؤں کو بھی 18/18 بار سزائے موت سنائی گئی۔

چھوٹو گینگ کے اٹھارہ سال سے کم عمر ملزموں کو 19/19 بار عمر قید کی سزا ہوگئی۔

راجن پور: کیس کا فیصلہ خصوصی عدالت نے کیا۔

چھوٹو گینگ پولیس اہلکاروں اور دیگر متعدد افراد کے اغواء، قتل، ڈکیتی اور راہزنی جیسے سنگین جرائم میں ملوث تھا۔

2016 میں گینگ کے ڈاکوؤں نے متعدد پولیس اہلکاروں کو یرغمال بنا لیا تھا۔

آرمی نے آپریشن کر کے ڈاکوؤں کو سرغنہ چھوٹو سمیت گرفتار کر کے پنجاب پولیس کے اہلکاروں کو بازیاب کروایا تھا۔

چھوٹو گینگ کا کیس دہشتگردی کی خصوصی عدالت میں چل رہا تھا۔

You might also like

Comments are closed.