سائرہ پیٹر کی لندن ہائی کمیشن میں فارمنس,سماں باندھ دیا

سائرہ پیٹر کی لندن ہائی کمیشن کی تقریب میں شان دارپر فارمنس۔سماں باندھ دیا ۔ہائی کمشن لندن میں برطانوی مسیحی مشنریوں کو خراج عقیدت پیش کرنے کیلئے ” محبت کا سفر” The Journey of Love کے نام سے ایک تقریب منعقد کی گئی جس میں ایسے کرسچئن مشنریوں کو مدعو کیا گیا جنھوں نے پاکستان میں ایک طویل رہ کر تعلیمی طبی اور شعبوں میں پاکستان کو خاطر خواہ طور پر ترقی کی راہ پر گامزن کیا تھا۔

اس موقع پر موجود بیشتر ریٹائرڈ مشنری اپنی تقاریر میں پاکستان میں گزراے ھوئے اپنے حسین لمحات کا ذکر کرتے ھوئے ابدیدہ ھو گئے۔آکسفورڈ اسکالر روزمیری جیمس بے کہا باخ اسپتال قلندراباد(خیبر پختون خواہ) میں گزرے ھوئے وقت نے انھیں پاکستان اور وھاں باشندوں کی تاحیات مدد گار بنا دیا ھے۔ ھائی کمشن نفیس ذکریاہ صاحب نے اپنے خطاب میں مشنریوں کی قربانیوں کو بےحد سراہا۔ پروگرام کے آخر میں پاکستان کی عالمی صوفی اوپرا سنگر سائرہ پیٹر نے کہا کہ کرسچن کمیونٹی نے دکھی انسانیت کے لیے گراں قدر خدمات انجام دیں ہیں ۔سائرہ پیٹر نے مزید کہا کہ صحت۔تعلیم اور دیگر شعبوں کی طرح موسیقی کو پروان چڑھانے میں سلیم رضا۔اے نیر ۔ایس بی جون ۔وغیرہ نے کلیدی کردار ادا کیا ۔ان سب کا تعلق کرسچن کمیونٹی سے تھا۔ آج کی تقریب میں شرکت کر کے میرا دل بہت خوش ہوا اور میری کو سکون ملا۔میرے والدین نے میری تربیت میں سب سے زیادہ اہمیت دوسروں کی مدد کرنے پر دی۔ اپنی مختصر تقریر کے بعد مشنریوں اور مملکت پاکستان کی محبت اور اظہار تشکر کے طور پر انگریزی فلم Beaches کا ایک خصوصی نغمہ، Wind beneath my wings گا کر حاضرین سے بھر پور داد حاصل کی۔ اور پروگرام کے اختتام پر سائرہ پیٹر کے ساتھ سیلفی لینے والونکا تانتا بندھا رھا۔

You might also like

Leave A Reply

Your email address will not be published.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.